سٹیج اداکارہ ثوبیہ خان بڑی مشکل میں پھنس گئیں

ثوبیہ خان بڑی مشکل میں پھنس گئیں ، سٹیج اداکارہ ثوبیہ خان نے قتل کی دھمکیاں دینے والے کیخلاف تھانہ ستوکتلہ میں مقدمہ درج کروادیا ہے۔ ذرائع کے مطابق اداکارہ ثوبیہ خان کا کہنا ہے کہ نیازہ شاہ نامی شخص کی جانب سے مجھے جان سے مارنے کی دھمکیاں دی جارہی تھیں جس پر اس نے تھانہ ستوکتلہ میں ملزم کیخلاف مقدمہ درج کروا دیا ہے۔

اداکارہ ثوبیہ خان کا کہنا تھا کہ اس نے نیاز شاہ کیخلاف ایف آئی اے سائبر کرائم میں بھی درخواست دے رکھی ہے۔یاد رہے کہ گزشتہ روز ایبٹ آباد میں مقامی اداکارہ اور رقاصہ نور کو اس کے سابق شوہر نے فائرنگ کرکے قتل کردیا تھا۔نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کیجئیے

انڈے دینے والی ایک ایسی مخلوق جس کے بارے میں‌کبھی آپ کا تصور نہیں‌گیا ہوگا

اکمل نامی ایک لڑکا جس نے دعوی کیا ہے کہ وہ انڈے دیتا ہے اور اب تک 20 انڈے دے چکا ہے
انڈونیشیاء میں‌ڈاکٹرز کو تب حیرانگی کا سامنا کرنا پڑا جب ایک اکمل نامی لڑکے نے دعوی کیا کہ وہ انڈے دیتا ہے اور گزشتہ دو سال سے انڈے دے رہا ہے جن کی تعداد 20 ہو چکی ہے .

جب ڈاکٹروں‌نے اس کی تشخیص‌کی تو ایکسرے میں‌بھی ایک انڈا اس کے جسم میں‌نظر آیا . اکمل کے والد نے بھی اس دعوی کی تصدیق کی ہے اور اس کا کہنا تھا کہ ہمیں‌پہلے یقین نہیں تھا لیکن اس نے ہمارے سامنے انڈہ دے ڈالا ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ کسی انسان کے جسم کے اندر انڈے جیسی چیز کا وجود میں آنا ناممکن سی بات ہے۔ لیکن اکمل کا کہنا ہے کہ کبھی ایسا اتفاق بھی نہیں ہوا کہ اسنے کوئی انڈا ثابت نگل لیا ہو۔ اس سارے واقعہ کے بعد ڈاکٹرز نے لڑکے کی حالت کا مطالعہ کرنے کے لئے اسے شیخ یوسف ہسپتال میں زیر نگرانی رکھ لیا ہے

عمران خان کی سابقہ اہلیہ جمائما کی عمران پر سخت تنقید

معروف صحآفی و تجزیہ نگار عارف نظامی کا کہنا ہے کہ عمران خان کی تیسی شادی پر ان کی سابقہ بیگم جمائمہ بھی سخت ناراض ہے اور ان کے بچے بھی اس معاملہ پر پریشان ہے ان کا کہنا ہے کہ ہمیں اس شادی پر تحفظات ہیں جبکہ بچے تو بالکل اس شادی کو قبول کرنے کے موڈ میں نہیں ہے

ان کا کہنا تھا کہ مجھے تو اس شادی پر کوئی حٰرانگی نہیں ہے کیونکہ پہلے بھی یہ ڈرامہ ہو چکا ہے پہلے بھی نکاح کو چھپایا تھا جب کہ اس بار بھی یہی حرکت کی گئی ہے یاد رہے کہ یہ شادی صرف پاکستان میں نہین بلکہ بین الاقوامی میڈیا میں بھی زیر بحث آئی ہے شادی کے بعد عمران خان نے ٹوئیٹر اکاونٹ پر پیغام جاری رتے ہوئے کہا کہ وہ شادی پر نیک تمناؤں کا اظہار کرنے والوں کا شکریہ ادا کرتے ہیں اور اس کے ساتھ عوام کا بھی شکریہ ادا کیا ۔ عمران نے یہ شادی لاھور میں کی لیکن اس میں اپنی کسی رشتہ دار اور نہ ہی کسی بہن کو مدعو کیا بلکہ ذرائع کا کہنا ہے کہ اس شادی پر ان کی بہنیں بھی راضی نہیں تھی جبکہ یہ شادی بشری مانیکا کے گھر میں ہوئی تھی یہ نکاح مفتی سعید نے پڑھایا جب کہ گواہان میں زلفی بخاری ار عون چوہدری تھے

فلم شرابی کی اداکارہ اب کسی حال میں ہے

امیتابھ بچن کی فلم شرابی ایک بلاک بسٹر فلم تھی ، فلم کی کہانی ، جاندار اداکاری ، اور گانوں نے فلم بینوں کو کئی سالوں تک اپنی سحر میں مبتلاء رکھا ۔ اس فلم میں امیتابھکے مد مقابل کردار ادا کرنے والی اداکارہ جیا تھی جن کو دو مرتبہ فلم فئیر کا ایوارڈ ملا ۔ جیا بچن نے بالی ووڈ کے علاوہ اور زبانوں میں بھی

فلمیں بنائی ۔ جیا نے اپنے کیرئر کو تب الوداع کہا جب ہر طرف ان کی مانگ تھی اور سب سے زیادہ معاوضہ حاصل کرنے والی اداکارہ تھی ۔ جیا نے فلم

Jaya Prada

انڈسرٹری کو خیر باد کہنے کے بعد سیاست میں شمولیت اختیار کی ۔ 2004 سے 2014 تک بھارت کے شہر رام پور سے پارلیمنٹ کی ممبر رہیں۔ آج کل اداکارہ کا پسندیدہ موضوع عالمی و علاقائی سیاست ہے ۔ اور کسی نہ کسی طرح خبروں میں آتی رہتی ہے ۔ جیا نے فلم انڈسٹری کو چھوڑا لیکن اپنا سٹائل ویسے ہی

برقرار رکھا ہے اس میں کسی طرح کی تبدیلی دیکھنے کو نہیں ملی ۔

عراق میں داعش نے حضرت یونس علیہ السلام کا مزار شہید کر دیا تو نیچے سے کیا نکلا؟ دیکھ کر پوری دنیا کی آنکھیں کھلی کی کھلی رہ گئیں کیونکہ۔۔۔

بغداد(مانیٹرنگ ڈیسک) جب شدت پسند تنظیم داعش نے 2014ءمیں عراق کے شہر موصل پر قبضہ کیا تو وہاں موجود حضرت یونس ؑ کے مزار کو بھی بم دھماکوں سے نقصان پہنچایا۔ اب عراقی فوج کی طرف سے موصل کو داعش کے قبضے سے چھڑانے کے بعد جب ماہرین آثار قدیمہ مزار میں گئے تو عمارت کے نیچے سے ایسی چیز دریافت ہو گئی کہ دیکھ کر پوری دنیا کی آنکھیں کھلی کی کھلی رہ گئیں۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق مزار کے نیچے 2600سال قدیم عمارات موجود تھیں جن کے متعلق ماہرین آثار قدیمہ کو اس سے قبل کوئی علم نہیں تھا۔ان عمارات کے متعلق ماہرین نے خیال ظاہر کیا ہے کہ ”یہ قدیم بادشاہ ’ایسرحدون‘کا محل ہے۔“

رپورٹ کے مطابق مزار کے نیچے محل کے علاوہ کئی سرنگیں بھی موجود ہیں جن سے سنگ مرمر سے بنی کئی اشیاءبرآمد ہوئی ہیں جن میں کئی تختیاں بھی شامل ہیں۔ ان تختیوں پر مختلف عبارات تحریر ہیں۔ ان میں سے ایک پر ایسرحدون کو ”دنیا کا بادشاہ“ کہا گیا ہے جبکہ باقی تختیوں پرلکھی تحاریر سے اس کے خاندان کی تاریخ کا پتا چلتا ہے۔یہ تمام اشیاء672قبل مسیح کی ہیں۔ مزار کے نیچے دریافت ہونے والی عمارات کی دیواروں پر نقش و نگار بنے ہوئے ہیں جس سے اس قدیم تہذیب کے طرزتعمیر کا اندازہ ہوتا ہے۔واضح رہے کہ یہ مزار ابتدائی طور پر 1852ءمیں دریافت ہوا تھا جب موصل کے گورنر نے کھدائی کروائی تھی۔ اس کے بعد 1950ءمیں عراقی محکمہ آثار قدیمہ نے اس پر تحقیق شروع کی تاہم وہ آج تک ان زیرزمین عمارات اور سرنگوں تک نہیں پہنچ سکا تھا۔

اگر آپ رات کو سوتے ہوئے ادرک کے ساتھ یہ پٹی اپنے سینے پر رکھ لیں تو فوری یہ مسئلہ حل ہوجائے گا، جانئے وہ نسخہ جس کے بارے میں جان کر آپ اسے آزمائے بغیر نہ رہ پائیں گے

برمنگھم(نیوز ڈیسک)ہر کوئی جانتا ہے کہ کھانسی کے ساتھ ایک دن گزارنا بھی کتنا مشکل ہوتا ہے، اور اگر بدقسمتی سے یہ مسئلہ طول پکڑ جائے تو شب و روز عذاب ہو جاتے ہیں۔ بچے کمزور مدافعتی نظام کی وجہ سے عموماً کھانسی سے زیادہ متاثر ہوتے ہیں۔ عام طور پر ہم ایسی صورت میں ڈاکٹر کے پاس جاتے ہیں جو ہمیں کھانسی کا سیرپ یا دیگر ادویات تجویز کر دیتے ہیں، اور عموماً اسے ہی بہترین حل سمجھا جاتاہے۔

بدقسمتی سے ان ادویات کے سائیڈ ایفیکٹ بھی ہوتے ہیں، جن میں سردرد اور بے خوابی کا مسئلہ بھی شامل ہے۔ دوسری جانب ہم کھانسی جیسے مسئلے سے نجات پانے کے لئے کچھ انتہائی مفید قدرتی اجزاءسے مدد لے سکتے ہیں، جن کے ہرگز کوئی سائیڈ ایفیکٹ نہیں ہیں۔ ایک ایسی ہی مفید چیز ادرک کی پٹی ہے۔ یہ سادہ سی پٹی تیار کرنے کیلئے مندرجہ ذیل اجزاءدرکار ہوں گے:

ایک چمچ تازہ ادرک، یا ادرک کا پاﺅڈر
خالص شہد
زیتون کا تیل
آٹا
کپڑے کا ٹکڑا یا پٹی
چپکنے والی ٹیپ

پٹی تیار کرنے کے لئے پہلے شہد اور آٹے کو ملا لیجئے۔ اب اس میں زیتون کا تیل ملائیے اور اس کے بعد ادرک بھی ملالیجئے اور ان سب چیزوں کو اچھی طرح مکس کریں۔ اب اس آمیزے کو کپڑے یا پٹی پر رکھئے اور پھر اس پٹی کو ٹیپ کی مدد سے چھاتی پر چپکا لیجئے۔ اگر آپ یہ پٹی کسی بچے کے لئے استعمال کررہے ہیں تو بچے کو سلانے سے پہلے تین گھنٹے کیلئے لگائیں۔ بڑے اس پٹی کو لگا کر سو بھی سکتے ہیں۔
بچوں کیلئے یہ نسخہ استعمال کرنے سے پہلے یہ معلوم ہونا بہت ضروری ہے کہ ان کی جلد کو ادرک سے کوئی الرجی وغیرہ تو نہیں ہے۔ اگر آپ کو درست طور پر معلوم ہے کہ بچے کی جلد کو ادرک سے کوئی الرجی یا دیگر مسئلہ نہیں ہے تو صرف اسی صورت میں اس کی جلد پر یہ پٹی استعمال کریں۔

آپ کے جسم کا وہ حصہ جسے آپ کو کبھی بھی ہاتھ نہیں لگانا چاہیے کیونکہ۔۔۔

برمنگھم(نیوز ڈیسک) اپنے جسم کے کسی بھی حصے کو چھونے میں ہم عموماً کوئی ہچکچاہٹ محسوس نہیں کرتے مگر ڈاکٹروں کا کہناہے کہ کچھ حصوں کو چھونے میں ہمیں نا صرف ہچکچاہٹ ہونی چاہئیے بلکہ بہتر تو یہی ہے کہ انہیں بے وجہ چھونے سے گریز ہی کیا جائے۔ مثال کے طور پر ہم وقتاً فوقتاً اپنے چہرے کو چھوتے رہتے ہیں، مگر ڈاکٹر کہتے ہیں کہ ایسا کرنے سے پہلے آپ کے ہاتھ بالکل صاف ہونے چاہئیں۔ اگر صاف نہیں ہیں تو انہیں کسی اچھے صابن سے ضرور صاف کرلیں۔ اگر آپ میلے یا آلودہ ہاتھوں کے ساتھ چہرے کو چھوتے ہیں تو آپ کو چہرے پر نکلنے والے دانوں اور جلد کے دیگر مسائل کیلئے بھی تیار رہنا چاہیے۔

اسی طرح آنکھوں کا معاملہ بہت ہی حساس ہوتاہے۔ ہم میں سے اکثر جب آنکھوں میں تھکاوٹ محسوس کرتے ہیں تو بلا جھجک انہیں اپنی انگلیوں سے مسلنا شروع کردیتے ہیں۔ آنکھ کے زیادہ تر انفیکشن کی وجہ آلودہ ہاتھوں سے انہیں چھونا ہی ہوتا ہے ۔ اگر آپ کو آنکھوں کے کسی بھی قسم کے مسائل درپیش ہیں تو ڈاکٹر کی تجویز کے مطابق آئی ڈراپس استعمال کریں، ناکہ ہاتھوں سے انہیں بار بار مسلتے رہیں۔

جسم کے پچھلے حصے پر تو بیکٹیریا کی بہتات ہوتی ہے۔ اگر آپ جسم کے اس حصے کو چھوتے ہیں تو اس کے فوری بعد ہاتھوں کو صابن سے بہت اچھی طرح دھولیں ورنہ یہ بیکٹیریا آپ کے جسم کے کسی دوسرے حصے پر منتقل ہوکر انفیکشن کا باعث بنیں گے۔

ہمارے ناخنوں کے نیچے کی جلد بہت حساس ہوتی ہے اور اتفاق سے اس جگہ جراثیم بھی کافی جمع ہوتے ہیں۔ اگر آپ کسی وجہ سے ناخن کے نیچے کی جلد کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کرتے ہیں تو اسے نقصان پہنچ سکتا ہے اور اس میں انفیکشن بھی ہوسکتاہے۔ یہی وجہ ہے کہ اکثر لوگوں کو ناخن کے عین نیچے کی جلد میں انفیکشن اور زخم بننے جیسے مسائل کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

کان میں کھجلی محسوس ہو تو فوراً انگلی ڈال کر زور زور سے ہلانا اکثر لوگوں کا محبوب مشغلہ ہوتا ہے۔ ماہرین صحت کا کہنا ہے کہ کان کے اندر کی جلد ناصرف بہت نازک ہوتی ہے بلکہ اس پر بہت سے بیکٹیریا اور دیگر جراثیم بھی موجود ہوتے ہیں۔ کان میں انگلی ڈالنا نہ صرف جلد کے لئے نقصان دہ ہے بلکہ انفیکشن کا باعث بھی بن سکتا ہے۔

اپنے منہ میں انگلی ڈالنے سے بھی پرہیز کرنا چاہیے۔ اس کی وجہ یہ ہے کہ عموماً ہمارے ہاتھ اتنے صاف نہیں ہوتے کہ ہم انہیں منہ کے اندر داخل کرسکیں۔ انگلیوں پر لگے جراثیم منہ کے ذریعے ہمارے جسم کے اندر منتقل ہوکر جسم میں داخل ہوسکتے ہیں۔

اور سب سے اہم بات یہ ہے کہ وقت بے وقت ناک میں انگلی ڈالنے سے سخت پرہیز کرنا چاہیے۔ بعض لوگوں کو عادت ہوتی ہے کہ کسی بھی وقت ناک کی صفائی کے لئے اس میں انگلی پھیرنا شروع کردیتے ہیں۔ اگر آپ ناک کی صفائی کریں تو اس کے فوری بعد اپنے ناک او رہاتھ دونوں کو پانی سے صاف کریں، اور خصوصاً ہاتھوں کو صابن سے اچھی طرح صاف کرلیں۔

قرآن پاک کی وہ آیت جس کے پڑھنے سے دماغ تیز ہوتا ہے

کند ذہنی دور کرنے اور ذہین بننے کیلئے نہایت آزمودہ عمل ہے جس سے فائدہ اٹھا کر آپ نہ صرف اپنے بچوں کی کندذہنی کو دور کر سکتے ہیں بلکہ خود بھی ذہین بن سکتے ہیں. سورۃ مزمل کی آیت نمبر 8’’واذکر اسم ربک و تبتل الیہ تبتیلا‘‘ روزانہ 313مرتبہ اول و آخر گیارہ مرتبہ درود شریف پڑھیں انشا اللہ اس عمل کی برکت سے کند ذہنی دور ہو جائے گی اور آپ یاآپ کے بچے ذہین بن جائیں.

یہ بھی پڑھیے ….دوزخی …غزوہ احد میں ایک شخص بڑی بے جگری سے لڑ رہا تھا‘ سو سے زائد زخم اس کو لگ چکے تھے‘ تمام صحابہؓ اس کی بہادری پر حیران تھے اور رشک کر رہے تھے‘ اللہ تعالیٰ کے حبیب صلی اللہ علیہ وسلم بھی اس کو دیکھ رہے تھے‘

آپ نے تھوڑی دیر اس کو دیکھنے کے بعد فرمایا ‘ یہ دوزخی ہے‘ حالانکہ وہ جہاد کر رہا تھا‘ ایک صحابیؓ ان کے ساتھ ساتھ لگ گئے کہ جب کملی والے کی زبان مبارک سے یہ بات ادا ہوئی ہے تو کیا بات ہے کہ اس کو آپ دوزخی فرما رہے ہیں‘ اس نے تو سو پچاس کافروں کو قتل کر دیا ہے‘ تو قریب ہو کر پوچھا کہ تم اتنی دلیری اور بے جگری سے کیوں لڑ رہے ہو‘

کیا خاص بات ہے؟ اس نے کہا‘ یہ بات نہیں ہے‘بات نہیں ہے‘ میں اپنے خاندان کے نام ونمود کےلئے لڑ رہا ہوں‘ خاندانی شجاعت اور بہادری جو ہم میں موجود ہے اس کے نام کو زندہ رکھنے کےلئے لڑ رہا ہوں. پہلی بات یہ ہے کہ وہ جہاد کے حصہ دار ہی نہیں تھے‘

جہاد تو اللہ تعالیٰ کےلئے ہوتا ہے اور پھر اس شخص کو جب زیادہ زخم آئے تو اس نے اپنی تلوار کا دستہ پیروں میں رکھ کر تلوار کی نوک سینی پر رکھی اور دباﺅ ڈال کر خودکشی کر لی تو رسول اکرم صلی اللہ علیہ وسلم کا فرمان مبارک پورا ہوا کہ یہ دوزخی ہے‘ خودکشی کرنے والا دوزخی ہے.

کیا آپ کو معلوم ہے کہ شاہد آفریدی کا اپنی اہلیہ نادیہ آفریدی کے ساتھ شادی سے پہلے کیا رشتہ تھا ؟ وہ معلومات جو شائد آپ کو معلوم نہیں ،جان کر آپ کو بھی بے حد خوشی ہو گی

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن ) پاکستان کے سابق مایہ ناز کپتان اور شاندار بلے باز شاہد آفریدی کے بارے میں اگر یہ کہا جائے کہ ان جیسی شہرت کسی کھلاڑی کو نہیں ملی تو غلط نہ ہو گا ،شاہد آفریدی سے محبت کرنے والے اور ان کے مداح پاکستان سمیت پوری دنیا میں ہیں اور یہی وجہ ہے کہ وہ چاہے پی ایس ایل میں کھیلیں یا کسی اور لیگ میں توجہ کا مرکز لازمی رہتے ہیں ۔

نجی ٹی وی نیونیوز کے مطابق پاکستان ٹی 20 کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان اور بوم بوم کے نام سے شہرت پانے والے شاہد آفریدی جو کہ اپنی جارحانہ بلے بازی کی وجہ سے جانے جاتے ہیں نے اپنی کزن سے شادی کی۔نادیہ آفریدی اور شاہد آفریدی کی چار بیٹیاں ہیں جن کے نام انشاءآفریدی،اجواءآفریدی،اقصیٰ آفریدی اور اسمارا آفریدی ہیں۔

پاکستان میں کنڈوم کا وہ اشتہار متعارف کروادیا گیا جسے دیکھ کر پاکستانیوں کے چہرے شرم سے لال ہونے لگے

پاکستان میں کنڈوم کا وہ اشتہار متعارف کروادیا گیا جسے دیکھ کر پاکستانیوں کے چہرے شرم سے لال ہونے لگے

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) آباد ی کو کنٹرول کرنے کے لیے طرح طرح کے ہتھکنڈے استعمال کیے جاتے ہیں جن میں سے ایک کنڈوم بھی ہے ، ایک اندازے کے مطابق پاکستان میں ہرروز 14ہزار بچے پیداہورہے ہیں ۔ پاکستان جیسے ممالک میں کھلے عام کنڈوم وغیرہ کے بارے میں گفتگو مضحکہ خیز تصور کی جاتی ہے اور کنڈوم کے اشتہار بھی دبے لفظوں میں دیئے جاتے ہیں لیکن اب ایک ایسا اشتہارمتعارف کرادیاگیا جسے دیکھ کر پاکستانی شرم سے پانی پانی ہونے لگے ۔

نیوزویب سائٹ پڑھ لو کے مطابق پاکستان کی خطرناک حدتک بڑھتی ہوئی آبادی کے پیش نظر ایسی کسی بھی مہم کی تعریف کی جانی چاہیے ۔ عمومی طورپر اشتہارات میں پراڈکٹ خریدنے کی ترغیب دی جاتی ہے لیکن ’ڈوپاکستان‘ نامی کمپنی نے اپنے اشتہار میں کرکٹ کی کمنٹری کی طرز پر آواز کو جگہ دی اور ساتھ ساتھ وہی جملے ویڈیو پر لکھ بھی دیئے، ویڈیو اشتہار میں لمحہ بہ لمحہ بدلتی صورتحال پر روشنی ڈالی جارہی ہے ۔
پی ایس ایل کے دوران ہی شاید یہ اشتہار متعارف کرایاگیا جس کی وجہ سے کرکٹ تھیم پر اشتہاربنایاگیالیکن سوچنے کی بات یہ ہے کہ کیا ہم اپنی فیملیز کیساتھ بیٹھ کر یہ اشتہار دیکھ سکتے ہیں؟ ویڈیو دیکھئے ۔

وارننگ: صرف بالغوں کیلئے

اشتہار میں اداکیے جانیوالے الفاظ بالکل واضح ہیں ، تصور کریں کہ اگر آپ کے اردگرد دوست اور فیملی موجود ہوتو یقینا ہرکوئی ریموٹ ڈھونڈنے میں جت جائے گاگوکہ یہ پراڈکٹ فیملی کیلئے ہی ہے لیکن شاید ویڈیو پر سب ٹائٹل لگانا بھی ضرورت سے زیادہ تھا۔